بند کریں
شاعری منصور آفاق

ہجر کو تاپتے تاپتے جسم سڑنے لگا ہے

-

Hijar ko taaptay taaptay jism sarnay laga hai


(9) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان