بند کریں
شاعری ناصر کاظمی

دم گھٹنے لگا ہے وضع غم سے

-

Dam ghutney laga hai


(234) ووٹ وصول ہوئے