بند کریں
شاعری سعداللہ شاہاس کو بھی بچانا ہے خود کو بھی بچانا ہے

(307) ووٹ وصول ہوئے