بند کریں
شاعری ساغر صدیقیہے دعا یاد مگر حرف دعا یاد نہیں

(761) ووٹ وصول ہوئے