بند کریں
شاعری ساغر صدیقی

روداد محبت کیا کہیے کچھ یاد رہی کچھ بھول گئے

-

roodaad e muhabbaaaat


(689) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان