بند کریں
شاعری سلیم ساگر

بھاگنے لگتا ہے آخر محفلوں سے آدمی

-

bhagne lagta hai akhir mehfloon se aadmi


(304) ووٹ وصول ہوئے