بند کریں
شاعری شکیب جلالیکنار آب کھڑا خود سے کہہ رہا ہے کوئی

شکیب جلالی

shakeeb jalali

(437) ووٹ وصول ہوئے