بند کریں
شاعری صوفی تبسم

خزاں سے ابھرے فریب بہار میں ڈوبے

-

Khizan Say


(221) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان