بند کریں
شاعری ظفرترمذیمستی ہے تکبر ہے شرارت ہے بلا ہے

(160) ووٹ وصول ہوئے