دوارکا داس شعلہ - Davarka Das Shola

مشہور شاعر دوارکا داس شعلہ کی شاعری ۔ نظمیں اور غزلیں

نہیں کہتے کسی سے حال دل خاموش رہتے ہیں

دوارکا داس شعلہ

میری منزل کہاں ہے کیا معلوم

دوارکا داس شعلہ

غم کو وجہ حیات کہتے ہیں

دوارکا داس شعلہ

زیست بے وعدہ انوار سحر ہے کہ جو تھی

دوارکا داس شعلہ

زندگی کیا ہے ابتلا کے سوا

دوارکا داس شعلہ

ذرا نگاہ اٹھاؤ کہ غم کی رات کٹے

دوارکا داس شعلہ

دیکھ جرم و سزا کی بات نہ کر

دوارکا داس شعلہ

دل بے مدعا کا مدعا کیا

دوارکا داس شعلہ

ایک رہزن کو امیر کارواں سمجھا تھا میں

دوارکا داس شعلہ

انساں بہ یک نگاہ برا بھی بھلا بھی ہے

دوارکا داس شعلہ

اپنوں کے ستم یاد نہ غیروں کی جفا یاد

دوارکا داس شعلہ