MENU Open Sub Menu

Poetry From Book "Mujhe Tum Yaad Aate Ho" By Farhat Abbas Shah

فرحت عباس شاہ کی کتاب 'مجھے تم یاد آتے ہو' سے تمام شاعری

مجھے تم یاد آتے ہو

Mujhe Tum Yaad Aate Ho

زمین بھی نہ رہی رہگزار بھی نہ رہا

Zamin Bhi Na Rahi Rahguzaar Bhi Na Raha

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

یہی نہیں ہے کہ آنسو سمیٹ لایا ہوں

Yahi Nahin Hain Keh Aansu Samet Laya Hoon

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

سمے جیسے گزرتا جا رہا ہے

Samay Jaise Guzartaa Ja Raha Hai

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

ایک اداس اور بجھا ہوا دل

Aik Udaas Aur Bujhaa Hova Dil

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

مدت سے چھپایا ہوا غم کھلنے لگا ہے

Mudat Se Chupaya Hova Gam Khulne Laga Hai

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

کیا جانئے وہ دل سے اتر کیوں نہیں جاتا

Kia Janiye Woh Dil Se Utra Kyun Nahin Jata

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

ہم نے تو اداسی میں

Hum Ne To Udaasi Mein

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

ہمارا نام تری گفتگو میں جب آئے

Hamara Naam Teri Guftagu Mein Jab Aye

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

بدل گئے مرے موسم تو یار اب آئے

Badal Gaye Mere Mausam To Yaar Ab Aye

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

آنکھ کسی کے چہرے پر اور دل میں دھیان کسی کا

Aankh Kisi Ke Chehre Par Aur Dil Mein Dhiyan Kisi Ka

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ

آنکھ آنکھ کی دلداری ابہام ہوئی

Aankh Aankh Ki Dildari Abham Hoe

(Farhat Abbas Shah) فرحت عباس شاہ