بند کریں
شاعری ناصر ملک

بازیچہ مقسوم بکھر جائے کسی روز

-

Bazeecha e maqsoom bikhar jaey kisi roz


(1) ووٹ وصول ہوئے