بند کریں
شاعری ساغر صدیقیدیوان ساغر

یہ جو دیوانے سے دو چار نطر آتے ہیں

-

yeh jo dewannay se do chaar nazar aatay hain


(632) ووٹ وصول ہوئے