بند کریں
شاعری شاہداقبال

باطن نظر نہ آتا تھا ظاہر کی آنکھ سے

-

batan nazar na ata tha zahir ki ankh se


(207) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان