بند کریں
شاعری شاہد واسطی

نہیں یہ بات کہ نفرت ہے عام لوگوں سے

-

nahi yeh baat k nafrat hai aam logoon se


(239) ووٹ وصول ہوئے