Dast E Hunar Jhatakte Hue Zaya Hunar Giya

دست ہنر جھٹکتے ہی ضائع ہنر گیا

دست ہنر جھٹکتے ہی ضائع ہنر گیا

چارہ گری نہیں رہی جب چارہ گر گیا

ہستی سے مل گیا مجھے کچھ نیستی کا فہم

صحرا وہاں ملا جہاں دریا اتر گیا

کیا ہو سکے حساب کہ جب آگہی کہے

اب تک تو رائیگانی میں سارا سفر گیا

وہ ایک جذبہ جس نے جمال آشنا کیا

منظر ہٹا تو جسم کے اندر ہی مر گیا

شاید سر حیات مجھے آ ملے کبھی

اک شخص میرے جیسا نہ جانے کدھر گیا

قاسم یعقوب

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(739) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Qasim Yaqub, Dast E Hunar Jhatakte Hue Zaya Hunar Giya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 27 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Qasim Yaqub.