MENU Open Sub Menu

Shahid Kamal Poetry, Shahid Kamal Shayari

شاہد کمال - Shahid Kamal

Poetry of Shahid Kamal, Urdu Shayari of Shahid Kamal

شاہد کمال کی شاعری

یہ ضرورت ہے تو پھر اس کو ضرورت سے نہ دیکھ

Yeh Zaroorat Hae Tu Phir Es Ko Zaroorat Se Na Dekh

(Shahid Kamal) شاہد کمال

ننھا سا دیا ہے کہ تہہ آب ہے روشن

Nanha Sa Diya Hae Keh Teh E Aab Hae Raoshan

(Shahid Kamal) شاہد کمال

میں کہاں تک تجھے صفائی دوں

Main Kahan Tak Tujhay Safai Dun

(Shahid Kamal) شاہد کمال

جو اس چمن میں یہ گل سرو یاسمن کے ہیں

Jo Os Chaman Men Yeh Gul Sarw O Yasman Ke Hain

(Shahid Kamal) شاہد کمال

کنج دل میں ہے جو ملال اچھال

Kunje Dil Main Hae Jo Malal Ochaal

(Shahid Kamal) شاہد کمال

سوچ رہا ہے اتنا کیوں اے دست بے تاخیر نکال

Soch Raha Hae Itna Kion Aey Dast E Bay-takheer Nikaal

(Shahid Kamal) شاہد کمال

مقتل میں چمکتی ہوئی تلوار تھے ہم لوگ

Maqtal Mein Chamakti Hoi Talwar Thay Hum Log

(Shahid Kamal) شاہد کمال

جو اس زمین پہ رہتے تھے آسمان سے لوگ

Jo Es Zameen Pe Rehtay Thay Asman Se Log

(Shahid Kamal) شاہد کمال

میں کیا ہوں کون ہوں یہ بتانے سے میں رہا

Main Kia Hun Kaon Hun Yeh Batanay Se Main Raha

(Shahid Kamal) شاہد کمال

خود مجھ کو میرے دست کماں گیر سے ملا

Khud Mujh Ko Meray Dast E Kaman-geer Se Mila

(Shahid Kamal) شاہد کمال

Urdu Poetry & Shayari of Shahid Kamal. Read Ghazals, Sad Poetry of Shahid Kamal, Ghazals, Sad Poetry and much more. There are total 10 Urdu Poetry collection of Shahid Kamal published online.