Aik Fizaye Beest Hai Main HooN

اک فضائے بسیط ہے ، میں ہوں

اک فضائے بسیط ہے ، میں ہوں

رقص ہے ، سُر ہے گیت ہے ، میں ہوں

کس محبت کی بات کرتے ہو

ان سماجوں کی ریت ہے ، میں ہوں

ہائے اذنِ سفر ملا ہے ، مگر

دائرے پر محیط ہے ، میں ہوں

کس نے مجھ پر لگائی تھیں شرطیں

ہار ہے اور نہ جیت ہے ، میں ہوں

اور جنت بھلا کہاں ہوگی

شام ہے ، تم ہو، پریت ہے میں ہوں

رب سے ہوتی ہیں کب ملاقاتیں

زیرِ لب بات چیت ہے ، میں ہوں

شبہ طراز

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(443) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Sheba Taraz, Aik Fizaye Beest Hai Main HooN in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 161 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Sheba Taraz.