بند کریں
شاعری فیضان عارفسارے خط بھی مرے جلادینا

(250) ووٹ وصول ہوئے