بند کریں
شاعری رفیق خیالاتنی فرصت نہیں اُس پیکر پندار کے پاس

(250) ووٹ وصول ہوئے