Siyah Raat Pashemaan Hai Hum Rukabi Se

سیاہ رات پشیماں ہے ہم رکابی سے

سیاہ رات پشیماں ہے ہم رکابی سے

وہ روشنی ہے ترے غم کی ماہتابی سے

صبا کے ہاتھ ہے اب عزت نگاہ مری

چمن مہکنے لگا گل کی بے حجابی سے

فرار ان سے ہے مشکل وہ دسترس میں نہیں

یہ زرد زرد سے موسم وہ دن گلابی سے

لہو لہو نظر آتی ہے شاخ گل مجھ کو

کھلے وہ پھول تری تازہ انقلابی سے

عجب نہیں ہے کہ پا جائیں قافلے منزل

ہمارے نقش قدم کی ستارہ تابی سے

کوئی کتاب جو کھولیں تو کیا پڑھیں فاخرؔ

کھلیں نگاہ میں چہرے اگر کتابی سے

احمد فاخر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1118) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmad Fakhir, Siyah Raat Pashemaan Hai Hum Rukabi Se in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Urdu Poetry. Also there are 20 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmad Fakhir.