Shehr E Maqtal Ko Hawa Phir Se Basana Acha

شہرِ مقتل کو ہُوا پھر سے بسانا اچھا

شہرِ مقتل کو ہُوا پھر سے بسانا اچھا

چل لے دیکھیں گے وہیں کس کا نشانا اچھا

بے رخی سے تری احساس مجھے ہوتا ہے

تجھ سے بہتر ہے مری جان بے گانا اچھا

اِس سے بہتر ہے رکھو خود کو ہی تنہا لیکن

ایسے ویسے سے کہاں دل کا لگانا اچھا

ہم نے سیکھا ہے بزگوں کی نصیحت سے یہی

لاکھ دشمن ہو ، نہیں دل کا دُکھانا اچھا

اب حقیقت کو چلو یوں ہی بدل کر دیکھیں

لوگ سن کر جسے کہہ دیں ، ہے فسانا اچھا

ڈاکٹر آفتاب عرشی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(481) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Dr. AFTAB ARSHI, Shehr E Maqtal Ko Hawa Phir Se Basana Acha in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 15 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Dr. AFTAB ARSHI.