Dost Sab Matlab Parast Ehbaab Sab Matlab Parast

دوست سب مطلب پرست، احباب سب مطلب پرست

دوست سب مطلب پرست، احباب سب مطلب پرست

ہو گئے معصوم سے بھی لوگ اب مطلب پرست

چار سُو حرص و ہوس کی چل پڑی آب و ہوا

دیکھ لو! ہیں پھول سے لَب، سب کے سب مطلب پرست

ہے بپا جو آپ کے در پہ بہاروں کا سماں

عین ممکن ہے یہ ہو جشنِ طرب مطلب پرست

اُس کو تو خالی کبھی لوٹانا فطرت ہی نہیں

جب بڑھا میری طرف دستِ طلب، مطلب پرست

ہے خرابی ایک ہی بس لَوٹ کر آتے نہیں

یہ مکمل کر لیں مطلب اپنا جب مطلب پرست

محو ہو تم کیوں حیات ان کے فریبِ حُسن میں؟

خال و خد عیّار ہیں، رخسار و لَب مطلب پرست

حیات عبداللہ

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(617) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hayat Abdullah, Dost Sab Matlab Parast Ehbaab Sab Matlab Parast in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 4 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hayat Abdullah.