Khaak Main Lipti Kahani Or Hai

خاک میں لپٹی کہانی اور ہے

خاک میں لپٹی کہانی اور ہے

رنگ لیکن آسمانی اور ہے

کل تلک وہ بانٹتی خوشبو رہی

اب ہوا کی چھیڑ خانی اور ہے

دھوپ کے صحرا میں چل کر دیکھنا

آبلوں کی شادمانی اور ہے

چینٹیوں سے پھر مرا وعدہ ہوا

ایک کوشش آزمانی اور ہے

رات کے گھر میں بڑا کہرام تھا

صبح کی اب بے زبانی اور ہے

تتلیوں کو تھی صبا کی جستجو

گلستاں میں حکمرانی اور ہے

کونپلیں اذن سفر کی منتظر

زرد پتوں میں کہانی اور ہے

مہرباں پھولوں پہ لگتی تھی ہوا

بہتے پانی کی روانی اور ہے

ہاں ندامت تجھ کو ہونی چاہیے

حیف جعفرؔ پانی پانی اور ہے

جعفر ساہنی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(630) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jafar Sahni, Khaak Main Lipti Kahani Or Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 38 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jafar Sahni.