Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath, Urdu Ghazal By Professor Rasheed Hasrat

Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath is a famous Urdu Ghazal written by a famous poet, Professor Rasheed Hasrat. Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath comes under the Love category of Urdu Ghazal. You can read Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath on this page of UrduPoint.

مُجھے قرِیب سے جو دیکھ اِنہماک کے ساتھ

پروفیسر رشید حسرت

مُجھے قرِیب سے جو دیکھ اِنہماک کے ساتھ

ہُؤا ہے مُجھ پہ مُسلّط تُو پُوری دھاک کے ساتھ

مَیں تُجھ کو دِل کے نگر کا بناؤں گا سرپنچ

ہر اِک قدم پہ مِلوں گا بڑے تپاک کے ساتھ

پڑے جو وقت کبھی مُجھ کو آزما کے تو دیکھ

لُٹاؤں جان بھی مَیں تُجھ پہ اِشتیاق کے ساتھ

کہا تھا کِتنا کہ اپنی انا سے باز رہے

وہ ہاتھ جاں سے بھی دھویا ہے اپنی ساک کے ساتھ

زمِیں پہ راکھ جو ہر سُو دِکھائی پڑتی ہے

مِرا وجُود بھی بِکھرا پڑا ہے راک کے ساتھ

مَیں پُوچھ بیٹھا کہ یہ موت کیا ہے، کیسی ہے

بتا گیا وہ معانی بھی اِشتقاق کے ساتھ

نماز کیسی کہ دِل سے غِلاظتیں نہ گئِیں

رشِیدؔ ماتھا رگڑنا ہے صِرف ناک کے ساتھ

پروفیسر رشید حسرت

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1897) ووٹ وصول ہوئے

You can read Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath written by Professor Rasheed Hasrat at UrduPoint. Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath is one of the masterpieces written by Professor Rasheed Hasrat. You can also find the complete poetry collection of Professor Rasheed Hasrat by clicking on the button 'Read Complete Poetry Collection of Professor Rasheed Hasrat' above.

Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath is a widely read Urdu Ghazal. If you like Mujhe Qareeb Se Jo Dekh Inhimak Ke Sath, you will also like to read other famous Urdu Ghazal.

You can also read Love Poetry, If you want to read more poems. We hope you will like the vast collection of poetry at UrduPoint; remember to share it with others.