Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai, Urdu Ghazal By Qazi Zaheer Ahmad

Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai is a famous Urdu Ghazal written by a famous poet, Qazi Zaheer Ahmad. Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai comes under the Sufi category of Urdu Ghazal. You can read Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai on this page of UrduPoint.

زوال ۔ عدل ترا ہر جگہ پہ سایا ہے

قاضی ظہیر احمد

زوال ۔ عدل ترا ہر جگہ پہ سایا ہے

میں جس طرف سے بھی آیا تمھیں کو پایا ہے

یہ حضر ۔ راہ مجھے کس جگہ پہ لایا ہے

کہیں عذاب کہیں رحمتوں کا سایہ ہے

کہیں پہ بھوک کہیں رزق کی فراوانی

مرے خدا نے یہ کیسا جہاں بنایا ہے

کہیں پہ دھوپ میں جلتے ہیں میرے گل بوٹے

کہیں پہ دشت ہیں اور بادلوں کا سایہ ہے

جو مٹ گیئے ہیں مساوات و عدل دنیا سے

یوں لگ رہا ہے قیامت کا روز آیا ہے

عجیب بات ہے احمد کمال ۔ فن تو نے

جہاں جہاں سے کمایا وہیں لٹایا ہے

قاضی ظہیر احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2828) ووٹ وصول ہوئے

You can read Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai written by Qazi Zaheer Ahmad at UrduPoint. Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai is one of the masterpieces written by Qazi Zaheer Ahmad. You can also find the complete poetry collection of Qazi Zaheer Ahmad by clicking on the button 'Read Complete Poetry Collection of Qazi Zaheer Ahmad' above.

Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai is a widely read Urdu Ghazal. If you like Zawal Adal Tera Har Jagah Pe Saaya Hai, you will also like to read other famous Urdu Ghazal.

You can also read Sufi Poetry, If you want to read more poems. We hope you will like the vast collection of poetry at UrduPoint; remember to share it with others.