Bayan Haal Ko Arz Talab Samjhte Hain

بیان حال کو عرض طلب سمجھتے ہیں

بیان حال کو عرض طلب سمجھتے ہیں

وہ لوگ جن کا ہے دعویٰ کہ سب سمجھتے ہیں

صحیح ہو کے غلط ہوں یہی خطا میری

کہ میں جو ہوں وہ مجھے لوگ کب سمجھتے ہیں

میں جن کے وہم و گماں کو فروغ دیتا ہوں

مجھے حقیر وہ خود کے سبب سمجھتے ہیں

تمام عیب مجھی کو دکھائی دیتے ہیں

سو میرے دوست مجھی کو عجب سمجھتے ہیں

سبق ہمیں بھی ملا ہے کوئی ضرور کہ ہم

جو کچھ نہ پہلے سمجھتے تھے اب سمجھتے ہیں

زمیں ہو خشک تو فصلیں نہیں اگا کرتیں

اس ایک بات کو دریا کے لب سمجھتے ہیں

کسی کی ذات سے واقف کوئی نہیں راحتؔ

اگرچہ سب یہاں نام و نسب سمجھتے ہیں

راحت حسن

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(335) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rahat Hasan, Bayan Haal Ko Arz Talab Samjhte Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rahat Hasan.