بند کریں
شاعری افضل خان شکستِ زندگی ویسے بھی موت ہی ہے نا

(29) ووٹ وصول ہوئے