Chanchalahat Main Tu Mamola Hai

چنچلاہٹ میں تو ممولا ہے

چنچلاہٹ میں تو ممولا ہے

جھلجھلاہٹ میں در امولا ہے

دیکھ تجھ مکھ کوں یوں چھپے یوسف

جوں کبوتر کنویں میں کولا ہے

سیر کرتا ہوں بیٹھ کر اس بیچ

دل ہمارا اڑن کھٹولا ہے

سرو سیں قد ہے یار کا موزوں

میں نے میزان لیں کے تولا ہے

سرد مہری سیں بے وفا کا حال

ہے خنک اس قدر کہ اولا ہے

جان کر کے اجان ہوتا ہے

تم نہ جانو کہ جان بھولا ہے

ہم سوں سب مل کہو مبارک باد

کہ ٹک اک ہنس کے آ کے بولا ہے

آبروؔ ہائے کیوں گلے نہ لگا

میرے دل میں یہی ملولا ہے

نجم الدین شاہ مبارک

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(235) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abroo Shah Mubarak, Chanchalahat Main Tu Mamola Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 45 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abroo Shah Mubarak.