Ghairat Ishq Slamat Thi Anaa Zindah Thi

غیرت عشق سلامت تھی انا زندہ تھی

غیرت عشق سلامت تھی انا زندہ تھی

وہ بھی دن تھے کہ رہ و رسم وفا زندہ تھی

قیس کو دوش نہ دو رکھیو نہ فرہاد کو نام

انہی لوگوں سے محبت کی ادا زندہ تھی

شہر بیمار کے ہر کوچہ و بام و در پر

ہم بھی مرتے تھے کہ جب خلق خدا زندہ تھی

بجھ گئیں شمعیں تو دم توڑ گئے جھونکے بھی

جس طرح زہر رقابت سے ہوا زندہ تھی

یاد ایام کہ صحرائے محبت میں فرازؔ

جرس قافلۂ دل کی صدا زندہ تھی

احمد فراز

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(432) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Faraz, Ghairat Ishq Slamat Thi Anaa Zindah Thi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 154 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Faraz.