Is Ne Dekha Jo Mujhe Aalam Herani Mein

اس نے دیکھا جو مجھے عالم حیرانی میں

اس نے دیکھا جو مجھے عالم حیرانی میں

گر پڑا ہاتھ سے آئینہ پریشانی میں

آ گئے ہو تو برابر ہی میں خیمہ کر لو

میں تو رہتا ہوں اسی بے سر و سامانی میں

اس قدر غور سے مت دیکھ بھنور کی جانب

تو بھی چکرا کے نہ گر جائے کہیں پانی میں

کبھی دیکھا ہی نہیں اس نے پریشاں مجھ کو

میں کہ رہتا ہوں سدا اپنی نگہبانی میں

وہ مرا دوست تھا دشمن تو نہیں تھا فیصلؔ

میں نے ہر بات بتا دی اسے نادانی میں

فیصل عجمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(857) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Faisal Ajami, Is Ne Dekha Jo Mujhe Aalam Herani Mein in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love Urdu Poetry. Also there are 52 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Faisal Ajami.