Aey Husn Zamanay Kay Tewar Bhi Tu Samjha Kar

اے حسن زمانے کے تیور بھی تو سمجھا کر

اے حسن زمانے کے تیور بھی تو سمجھا کر

اب ظلم سے باز آ جا اب جور سے توبہ کر

ٹوٹے ہوئے پیمانے بے کار سہی لیکن

مے خانے سے اے ساقی باہر تو نہ پھینکا کر

جلوہ ہو تو جلوہ ہو پردہ ہو تو پردہ ہو

توہین تجلی ہے چلمن سے نہ جھانکا کر

ارباب جنوں میں ہیں کچھ اہل خرد شامل

ہر ایک مسافر سے منزل کو نہ پوچھا کر

فنا نظامی کانپوری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(660) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fana Nizami Kanpuri, Aey Husn Zamanay Kay Tewar Bhi Tu Samjha Kar in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fana Nizami Kanpuri.