GHULAM MURTAZA RAHI Poetry, GHULAM MURTAZA RAHI Shayari

غلام مرتضی راہی - GHULAM MURTAZA RAHI

Poetry of GHULAM MURTAZA RAHI, Urdu Shayari of GHULAM MURTAZA RAHI

غلام مرتضی راہی کی شاعری

کیسا انساں ترس رہا ہے جینے کو

Kaisa Insaa Taras Raha Hai Jeeney Ko

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

کہاں تک اس کی مسیحائی کا شمار کروں

Kahan Tak Is Ki Masehaie Ka Shumaar Karoon

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

جو اس طرف سے اشارہ کبھی کیا اس نے

Jo Is Taraf Se Ishara Kabhi Kya Is Ne

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

جھانکتا بھی نہیں سورج مرے گھر کے اندر

Jhankta Bhi Nahi Sooraj Marey Ghar Ke Andar

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

جیسے کوئی کاٹ رہا ہے جال مرا

Jaisay Koi Kaat Raha Hai Jaal Mra

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

حسن عمل میں برکتیں ہوتی ہیں بے شمار

Husn Amal Mein Barkaten Hoti Hain Be Shumaar

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

حصار جسم مرا توڑ پھوڑ ڈالے گا

Hisaar Jism Mra Toar Phore Daaley Ga

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

ہر ایک سانس مجھے کھینچتی ہے اس کی طرف

Har Aik Saans Mujhe Khainchti Hai Is Ki Taraf

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

ہم سری ان کی جو کرنا چاہے

Hum Sri Un Ki Jo Karna Chahay

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

گرمیوں بھر مرے کمرے میں پڑا رہتا ہے

Garmiyon Bhar Marey Kamray Mein Para Rehta Hai

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

ایک اک لفظ سے معنی کی کرن پھوٹتی ہے

Aik Ik Lafz Se Maienay Ki Kiran Phoot’ti Hai

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

ایک دن دریا مکانوں میں گھسا

Aik Din Darya Makanon Mein Ghisa

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

دوسرا کوئی تماشہ نہ تھا ظالم کے پاس

Dosra Koi Tamasha Nah Tha Zalim Ke Paas

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

دل نے تمنا کی تھی جس کی برسوں تک

Dil Ne Tamanna Ki Thi Jis Ki Barson Tak

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

دیکھنے سننے کا مزہ جب ہے

Dekhnay Suneney Ka Maza Jab Hai

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

چلے تھے جس کی طرف وہ نشان ختم ہوا

Chalay Thay Jis Ki Taraf Woh Nishaan Khatam Sun-hwa

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

چاہتا ہے وہ کہ دریا سوکھ جائے

Chahta Hai Woh Ke Darya Sookh Jaye

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اپنی تصویر کے اک رخ کو نہاں رکھتا ہے

Apni Tasweer Ke Ik Rukh Ko Nihaan Rakhta Hai

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اپنی قسمت کا بلندی پہ ستارہ دیکھوں

Apni Qismat Ka Bulandi Pay Sitara Daikhon

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اے مرے پایاب دریا تجھ کو لے کر کیا کروں

Ae Marey Payaab Darya Tujh Ko Le Kar Kya Karoon

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اب مرے گرد ٹھہرتی نہیں دیوار کوئی

Ab Marey Gird Thahartii Nahi Deewar Koi

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اب جو آزاد ہوئے ہیں تو خیال آیا ہے

Ab Jo Azad Hue Hain To Khayaal Aaya Hai

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

اب اور دیر نہ کر حشر برپا کرنے میں

Ab Aur Der Nah Kar Hashar Barpaa Karne Mein

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

آتا تھا جس کو دیکھ کے تصویر کا خیال

Aata Tha Jis Ko Dekh Ke Tasweer Ka Khayaal

(GHULAM MURTAZA RAHI) غلام مرتضی راہی

Records 1 To 24 (Total 63 Records)

Urdu Poetry & Shayari of GHULAM MURTAZA RAHI. Read Ghazals, Two Liness, Sad Poetry, Social Poetry of GHULAM MURTAZA RAHI, Ghazals, Two Liness, Sad Poetry, Social Poetry and much more. There are total 63 Urdu Poetry collection of GHULAM MURTAZA RAHI published online.