Shohar Nama

شوہر نامہ

شوہر جی اٹھو گھر سے نکلو شادی کا سوگ منانا کیا

جو ہونا تھا وہ ہو کے رہا اب دل کو اور جلانا کیا

بیوی کی زبان درازی سے جھنجھلاتے ہو گھبراتے ہو

جب شادی کر ہی بیٹھے ہو تو پھر اب شور مچانا کیا

سب دوستوں کے اکسانے پر اٹھو تو سہی نکلو تو سہی

جب اردو فلم ہی دیکھنی ہے تو شبنم کیا اور شبانہ کیا

چلو کوٹ کی ساری جیبوں میں ڈھونڈو تو سہی دیکھو تو سہی

اک دس کا نوٹ ہی مل جائے تو ہاتھ اپنا پھیلانا کیا

شب بیتی چاند بھی ڈوب چلا اب پاؤں دبانا بند کرو

اٹھو جلدی آٹا گوندھو تمہیں ناشتہ نہیں بنانا کیا

شادی ہو گئی آزادی چھنی زنجیر پڑی اب پیروں میں

میاں آنکھیں لڑانا بند کرو اب ہنسنا کیا اور ہنسانا کیا

اب تم شوہر ہو حد میں رہو اور آنکھ مٹکا جانے دو

بیوی کے قہر کو نہ دعوت دو تمہیں لوٹ کے گھر نہیں جانا کیا

لو بھور بھئی اب اٹھ بیٹھو چائے کا پانی رکھو جا کر

بیوی کو اگر چائے نہ ملی تو رات کو کھاؤ گے کھانا کیا

حمادحسن

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1337) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hammad Hasan, Shohar Nama in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Funny Urdu Poetry. Also there are 6 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Funny poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hammad Hasan.