بند کریں
شاعری شاہداقبال

اِسی پرانی حویلی میں لوگ بستے بھی ہیں

-

issi purani haweli main loog baste bhi hain

شاہداقبال

shahid iqbal

(219) ووٹ وصول ہوئے