MENU Open Sub Menu

Samina Saqib Poetry, Samina Saqib Shayari

ثمینہ ثاقب - Samina Saqib

1992 خان پور

Poetry of Samina Saqib, Urdu Shayari of Samina Saqib

ثمینہ ثاقب کی شاعری

کیسا پیارا شخص تھا اور میں خواب میں رکھ کر بھول گئی

Kaesa Piyara Shakhs Tha Aor Main Khwaab Mein Rakh Kar Bhol Gai

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

بدن کے کھیت کو اب سینچنا ہے

Badan Ke Khaet Ko Ab Saenchna Hae

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

جستجو سے خدا ملا کہ نہیں

Justjoo Se Khuda Mila Keh Nahi

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

بدن یہ جس کے لیے گہرا گھنا سایا ہے

Badan Yeh Jis Ke Liay Gehra Ghana Saya Hae

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

آئے گا کب میرا شہزادہ توبہ ہے

Aey Ga Kab Mera Shahzada Taoba Hae

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

میں اپنے غم چھپانا چاہتی ہوں

Main Apnay Gham Chupana Chahti Hun

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

لگنے کو تو ابھی کے پھول کی ہے

Lagnay Ko Tu Abhi Ke Phool Ki Hae

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

پیڑ تعبیر کے ہرے ہوتے

Paer Ta'beer Ke Haray Hotay

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

عشق کو قید سے رہا کر لیں

Ishq Ko Qaed Se Riha Kar Lain

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

کھو گئے سارے راستے مائے

Kho Gaey Saaray Raastay Maaey

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

مجھے کہانی کے کردار سے محبت تھی

Mujhay Kahani Ke Kirdar Se Mohabbat Thi

(Samina Saqib) ثمینہ ثاقب

Urdu Poetry & Shayari of Samina Saqib. Read Ghazals, Sad Poetry, Social Poetry, Heart Broken Poetry of Samina Saqib, Ghazals, Sad Poetry, Social Poetry, Heart Broken Poetry and much more. There are total 11 Urdu Poetry collection of Samina Saqib published online.