Yeh Jagah Ahal Junoo Ab Nahi Rehne Wali

یہ جگہ اہل جنوں اب نہیں رہنے والی

یہ جگہ اہل جنوں اب نہیں رہنے والی

فرصت عشق میسر کہاں پہلے والی

کوئی دریا ہو کہیں جو مجھے سیراب کرے

ایک حسرت ہے جو پوری نہیں ہونے والی

وقت کوشش کرے میں چاہوں مگر یاد تری

دھندلی ہو سکتی ہے دل سے نہیں مٹنے والی

اب مرے خوابوں کی باری ہے یہی لگتا ہے

نیند تو چھن چکی کب کی مرے حصے والی

ان دنوں میں بھی ہوں کچھ کار جہاں میں مصروف

بات تجھ میں بھی نہیں رہ گئی پہلے والی

شہر یار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(681) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Shehr Yar, Yeh Jagah Ahal Junoo Ab Nahi Rehne Wali in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 13 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Shehr Yar.