Rang Jamnay Nah Diya Baat Ko Chalne Nah Diya

رنگ جمنے نہ دیا بات کو چلنے نہ دیا

رنگ جمنے نہ دیا بات کو چلنے نہ دیا

کوئی پہلو مرے مطلب کا نکلنے نہ دیا

کچھ سہارا بھی ہمیں روز ازل نے نہ دیا

دل بدلنے نہ دیا بخت بدلنے نہ دیا

کوئی ارماں ترے جلووں نے نکلنے نہ دیا

ہوش آنے نہ دیا غش سے سنبھلنے نہ دیا

چاہتے تھے کہ پیامی کو پتا دیں تیرا

رشک نے نام ترا منہ سے نکلنے نہ دیا

شمع رو میں نے کہا تھا مری ضد سے اس نے

شمع کو بزم میں اپنے کبھی جلنے نہ دیا

ظہیرؔ دہلوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1457) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of ZAHEER DEHLVI, Rang Jamnay Nah Diya Baat Ko Chalne Nah Diya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 48 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of ZAHEER DEHLVI.