Siyah Raat Ki Har Dil Kashi Ko Bhool Gaye

سیاہ رات کی ہر دل کشی کو بھول گئے

سیاہ رات کی ہر دل کشی کو بھول گئے

دیئے جلا کے ہمیں روشنی کو بھول گئے

کسی کلی کے تبسم نے بیکلی دی ہے

کلی ہنسی تو ہم اپنی ہنسی کو بھول گئے

جہاں میں اور رہ و رسم عاشقی کیا ہے

فریب خوردہ تری بے رخی کو بھول گئے

یہی ہے شیوۂ اہل وفا زمانے میں

کسی کو دل سے لگایا کسی کو بھول گئے

ذرا سی بات پہ دامن چھڑا لیا ہم سے

تمام عمر کی وابستگی کو بھول گئے

خدا پرست خدا سے تو لو لگاتے رہے

خدا کی شان مگر آدمی کو بھول گئے

وہ جس کے غم نے غم زندگی دیا ہے ظفرؔ

اسی کے غم میں غم زندگی کو بھول گئے

احمد ظفر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(335) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Zafar, Siyah Raat Ki Har Dil Kashi Ko Bhool Gaye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 36 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Zafar.