Sukhan K Chak Main Pinhaan Tumhari Chahat Hai

سخن کے چاک میں پنہاں تمہاری چاہت ہے

سخن کے چاک میں پنہاں تمہاری چاہت ہے

وگرنہ کوزہ گری کی کسے ضرورت ہے

زمیں کے پاس کسی درد کا علاج نہیں

زمین ہے کہ مرے عہد کی سیاست ہے

یہ انتظار نہیں شمع ہے رفاقت کی

اس انتظار سے تنہائی خوبصورت ہے

میں کیسے وار دوں تجھ پر مرے ستارۂ شام

یہ حرف خواب تو اک چاند کی امانت ہے

میں خاک خواب پلک سے جھٹکنے والا تھا

پتا چلا کہ یہی حاصل مسافت ہے

یہ مستطیل سا خاکہ کہ جس کو گھر کہیے

اسی کے دائرہ و در میں میری جنت ہے

یہ خوشہ چینی خوان انیسؔ ہے ارشدؔ

نمک نمط جو مرے شعر میں فصاحت ہے

ارشد عبدالحمید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(294) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Abdul Hamid, Sukhan K Chak Main Pinhaan Tumhari Chahat Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Abdul Hamid.