Maail Ba Karam Mujh Par Ho JaiN Tu Achha Ho

مائل بہ کرم مجھ پر ہو جائیں تو اچھا ہو

مائل بہ کرم مجھ پر ہو جائیں تو اچھا ہو

مقبول مرے سجدے ہو جائیں تو اچھا ہو

اس دشت نوردی سے پیچھا تو کہیں چھوٹے

ہم کوچۂ جاناں میں مر جائیں تو اچھا ہو

سر ہو در جاناں پہ دم اپنا نکل جائے

یہ کام محبت میں کر جائیں تو اچھا ہو

یوں تو سبھی آئے ہیں دفنانے مجھے لیکن

وہ بھی مری میت پہ آ جائیں تو اچھا ہو

پھر درد جدائی کا جھگڑا نہ رہے کوئی

ہم نام ترا لے کر مر جائیں تو اچھا ہو

دیکھیں نہ کسی کو ہم پھر دیکھ کے رخ تیرا

دیدار ترا کر کے مر جائیں تو اچھا ہو

رہ جائے محبت کا دنیا میں بھرم کچھ تو

دو پھول ہی تربت پہ دھر جائیں تو اچھا ہو

دھڑکا لگا رہتا ہے ہر وقت بلاؤں کا

ہم ساتھ نشیمن کے جل جائیں تو اچھا ہو

بدنام ہی کرنے کو آئیں وہ مگر آئیں

وہ اتنا کرم مجھ پر کر جائیں تو اچھا ہو

جا سکتے ہیں جانے کو ہم چل کے فناؔ دیکھیں

وہ خود ہمیں محفل میں بلوائیں تو اچھا ہو

فنا بلند شہری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(821) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fana Bulandshehri, Maail Ba Karam Mujh Par Ho JaiN Tu Achha Ho in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Social Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fana Bulandshehri.