Garam Lashain Gireen Faselon Say

گرم لاشیں گریں فصیلوں سے

گرم لاشیں گریں فصیلوں سے

آسماں بھر گیا ہے چیلوں سے

سولی چڑھنے لگی ہے خاموشی

لوگ آئے ہیں سن کے میلوں سے

کان میں ایسے اتری سرگوشی

برف پھسلی ہو جیسے ٹیلوں سے

گونج کر ایسے لوٹتی ہے صدا

کوئی پوچھے ہزاروں میلوں سے

پیاس بھرتی رہی مرے اندر

آنکھ ہٹتی نہیں تھی جھیلوں سے

لوگ کندھے بدل بدل کے چلے

گھاٹ پہنچے بڑے وسیلوں سے

گلزار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1003) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Gulzar, Garam Lashain Gireen Faselon Say in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 107 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Gulzar.