Marey Baray Main Kuch Socho Mujhe Neend A Rahi Hai

مرے بارے میں کچھ سوچو مجھے نیند آ رہی ہے

مرے بارے میں کچھ سوچو مجھے نیند آ رہی ہے

مجھے ضائع نہ ہونے دو مجھے نیند آ رہی ہے

مرے اندر کے دکھ چہرے سے ظاہر ہو رہے ہیں

مری تصویر مت کھینچو مجھے نیند آ رہی ہے

تو کیا سارے گلے شکوے ابھی کر لو گے مجھ سے

کچھ اب کل کے لیے رکھو مجھے نیند آ رہی ہے

سحر ہوگی تو دیکھیں گے کہ ہیں کیا کیا مسائل

ذرا سی دیر سونے دو مجھے نیند آ رہی ہے

تمہارا کام ہے ساری حسیں بے دار رکھنا

مرے شانے پہ سر رکھو مجھے نیند آ رہی ہے

بہت کچھ تم سے کہنا تھا مگر میں کہہ نہ پایا

لو میری ڈائری رکھ لو مجھے نیند آ رہی ہے

محسن اسرار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(901) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mohsin Asrar, Marey Baray Main Kuch Socho Mujhe Neend A Rahi Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 27 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mohsin Asrar.