Jale Bunta Hoon Sakoon Hai Kiya

جالے بُنتا ہوا سکوت ہے کیا

جالے بُنتا ہوا سکوت ہے کیا

مجھ میں اک تارِ عنکبوت ہے کیا

اپنے دھاگے گنوا دیے میں نے

عشق ، کانٹوں میں الجھا سُوت ہے کیا

تیری باتیں سمندروں سی ہیں

یار ! تیرا ستارہ حُوت ہے کیا

اور بھی رس بھرے ثمر ہیں بہت

صرف تُو ، شاخِ شاہ تُوت ہے کیا

کھٹکھٹاتی ہے در مرا تعبیر

خواب مجھ میں کوئی حنوط ہے کیا

سانس لیتے ہو اور خوش ہو بہت

زندگی کا یہی ثبوت ہے کیا

قیوم طاہر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(248) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Qayyum Tahir, Jale Bunta Hoon Sakoon Hai Kiya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Qayyum Tahir.