Mukhtasar Waqt Hai Per Batain Kar

مختصر وقت ہے پر باتیں کر

مختصر وقت ہے پر باتیں کر

زندگی بیچ سفر باتیں کر

آ کبھی حجرہ دل میں میرے

رات کے پچھلے پہر باتیں کر

چل چلا جاؤں تجھے لے کر میں

پھر کسی خواب نگر باتیں کر

چھوڑ کر دنیا و دیں کی باتیں

ہے تو دشوار مگر باتیں کر

لم یزل شعر کی صورت تو بھی

مسند دل پہ اتر باتیں کر

زندگی رقص میں ہے میری جاں

بیٹھ جا شور نہ کر باتیں کر

تیرے احساس کو تصویر کروں

اب تو کاغذ پہ ابھر باتیں کر

گفتگو تجھ سے کروں ایسے میں

کھلنے لگتا ہے ہنر باتیں کر

بات کا اذن دیا جب اس نے

پھر تجھے کس کا ہے ڈر باتیں کر

تیری تکمیل ہوا چاہتی ہے

چاک سے اب تو اتر باتیں کر

صائم جی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(717) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Saim Ji, Mukhtasar Waqt Hai Per Batain Kar in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 13 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Saim Ji.