بند کریں
شاعری نصیر احمد ناصر

کبھی تم نے جھانکا ہے؟

-

kabhi tum ne jhanka hai


(309) ووٹ وصول ہوئے