Qiyam Der O Tuwaf Haram Nahi Kartay

قیام دیر و طواف حرم نہیں کرتے

قیام دیر و طواف حرم نہیں کرتے

زمانہ ساز تو کرتے ہیں ہم نہیں کرتے

تمہاری زلف کو سلجھائیں گے وہ دیوانے

جو اپنے چاک گریباں کا غم نہیں کرتے

اتر چکا ہے رگ و پے میں زہر غم پھر بھی

بہ پاس‌ عہد وفا چشم نم نہیں کرتے

یہ اپنا دل ہے کہ اس حال میں بھی زندہ ہیں

ستم کچھ اہل ستم ہم پہ کم نہیں کرتے

گرفتہ دل ہیں بتان حرم کہ اب شاعر

نشاط‌ و عیش کے ساماں بہم نہیں کرتے

سنا رہے ہیں جہاں کو حدیث دار و رسن

حکایت قد و گیسو رقم نہیں کرتے

وہ آستان شہی ہو کہ آستانۂ دوست

یہ اب کہیں سر تسلیم خم نہیں کرتے

احمد راہی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(469) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Rahi, Qiyam Der O Tuwaf Haram Nahi Kartay in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Rahi.