Khuda Woh Din Nah Dukhaay

خدا وہ دن نہ دکھائے

خدا وہ دن نہ دکھائے

کبھی کسی کو بھی

کہ اپنے پھول کو

اپنے لرزتے ہاتھوں سے

لحد کی گود میں اشکوں بھری نگاہوں سے

ستم رسیدہ بکھرتی اجڑتی آہوں سے

حسین چہرے پہ

مٹی نہ ڈالنا ہی پڑے

یہ موت آئی ھے مجھ پر، تُو مجھ میں زندہ ھے

بدن اتار کے روتی تڑپتی روح مری

الجھتی زیست کو وہ کر کے تار تار گئی

سلگتے دل سے چھلکتے لہو کی دھار گئی

خدا کی جیت مرے دل میں آ کے ہار گئی

علیم اطہر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(584) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Aleem Athar, Khuda Woh Din Nah Dukhaay in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Aleem Athar.