Khuday E Lam Yazal Ki Har Ata Ko Bhool Jatay Ho

خدائے لم یزل کی ہر عطاء کو بھول جاتے ہو

خدائے لم یزل کی ہر عطاء کو بھول جاتے ہو

شہہِ بطحا ﷺ کے ہر صدق و صفا کو بھول جاتے ہو

الم نشرح لك صدرک نہ پھونکا تم نے سینہ پر

درودِ مصطفٰے ﷺ صلِّ علٰی کو بھول جاتے ہو

جہالت کے اندھیروں میں ہے اندھی فہم و دانش بھی

خلائیں کھوج کر غارِ حرا کو بھول جاتے ہو

طلب کرتے ہو تم حفظ و اماں اپنے لئے خود تو

لرزتے کانپتے دستِ دعا کو بھول جاتے ہو

کھلونے دے کے بچوں کو دوائی باپ کی بھی لا

تم اپنے باپ کی مہر و وفا کو بھول جاتے ہو

تبسم آفریں سازینہءِ دل پر تھرکتے ہو

اسی سے چیختی آہ و بکا کو بھول جاتے ہو

نجاست سے بھرا اک لوتھڑا ہے ابتداء تیری

ارے تقویمِ احسن، ارتقاء کو بھول جاتے ہو

ابھی ہو مبتلائے عشق و مستی اور مدہوشی

قیامت ڈھا کے پھر روزِ جزاء کو بھول جاتے ہو

مری خاطر ہنسے ہو یا ہنسی آئی ہوئی مجھ پر

تم اپنے آپ کے جود و سخا کو بھول جاتے ہو

تری تو کج ادائی بھی مرا دل موہ لیتی ہے

تمہی ہو مدّعائے دل، دعا کو بھول جاتے ہو

علیم اطہر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(815) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Aleem Athar, Khuday E Lam Yazal Ki Har Ata Ko Bhool Jatay Ho in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Islamic Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Islamic poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Aleem Athar.