Rishta Khajyaya Hoa Kutta Hae

رشتہ کھجیایا ہوا کتا ہے

رشتہ کھجیایا ہوا کتا ہے

ایک کونے میں پٹک رکھا ہے

رات کو خواب بہت دیکھے ہیں

آج غم کل سے ذرا ہلکا ہے

میں اسے یوں ہی بچا دیتا ہوں

وہ نشانے پہ کھنچا بیٹھا ہے

جب بھی چوکو گے پھسل جائے گا

ہاں وہ گرنے پہ تلا بیٹھا ہے

رات سورج کو نگل ہی لے گی

پھر بھی دن اپنی جگہ بڑھیا ہے

کون سے جلتے دنوں کی باتیں

تم نے سورج ہی کہاں دیکھا ہے

فضل تابش

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(785) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fazal Tabish, Rishta Khajyaya Hoa Kutta Hae in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 19 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fazal Tabish.